پاگل کتے کے کاٹنے سے نوجوان جاں بحق –

کراچی: سگ گزیدگی کا شکار 18 سالہ نوجوان جناح اسپتال میں دورانِ علاج دم توڑ گیا۔

جناح اسپتال کی سینئر ایگزیکٹو ڈائریکٹر سیمی جمالی کے مطابق  نوری آباد کے  رہائشی 18 سالہ نوجوان ظہور خان کو تین ماہ قبل کتے نے کاٹا تھا مگر اہل خانہ نے اُس کا علاج نہیں کروایا۔ سیمی جمالی کے مطابق نوجوان کو انتہائی نگہداشت وارڈ میں رکھا گیا البتہ آج شام اُس کی طبیعت بہت خراب ہوئی، ڈاکٹرز نے اُسے بچانے کی کوشش کی مگر وہ جانبر نہ ہوسکا۔

نوجوان کے والد کا کہنا تھا کہ بیٹے کو تین ماہ قبل کتے نے کاٹا جس کے بعد وہ مقامی اسپتال لے کر گئے تو ڈاکٹر نے پٹی کر کے دوا دے دی تھی، بیٹے کی طبیعت  دور روز قبل بہت زیادہ خراب ہوئی جس کے بعد ہم اُسے اسپتال لے کر آئے۔

مزید پڑھیں: کراچی: پاگل کتے کے کاٹنے سے خاتون جاں بحق

جناح اسپتال کراچی کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر سیمی جمالی نے بتایا کہ نوجوان ضلع جامشورو کے علاقے نوری آباد میں واقع گاؤں جیوا خان گوٹھ کا رہائشی تھا، ان کا کہنا تھا کہ مریض کو جب جناح اسپتال کی ایمرجنسی میں لایا گیا تو اسے ریبیز کی بیماری لاحق ہو چکی تھی۔

اُن کا کہنا تھا کہ مریض کو پہلے کبھی کسی قسم کی ویکسین نہیں دی گئی اور نہ ہی اس کے والدین کو اس سے متعلق کوئی علم ہے۔

Comments

comments




Source link

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *